عابد شیرعلی کی دوبارہ گنتی کی درخواست مسترد

لاہور: عدالت نے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما عابد شیرعلی کے قومی اسمبلی کے حلقے این اے 108 میں ووٹوں کی دوبارہ گنتی کے لیے دائردرخواست مسترد کردی۔

لاہورہائیکورٹ نے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما عابد شیرعلی کی قومی اسمبلی کے حلقے این اے 108 میں ووٹوں کی دوبارہ گنتی کے لیے دائرکی گئی درخواست پر تحریری فیصلہ سناتے ہوئے درخواست مسترد کردی۔

لاہورہائیکورٹ کے جسٹس مامون الرشید نے عابد شیر علی کی درخواست پر حکم جاری کرتے ہوئے کہا درخواست گزار قانون کے مطابق متعلقہ فورم سے رجوع کرسکتا ہے۔

عابد شیرعلی نے درخواست میں موقف اپناتے ہوئے کہا تھا کہ پولنگ ایجنٹس کو گنتی کے وقت باہر نکال دیا گیا تھا، انہیں حلقہ این اے 108 میں صرف 1200 ووٹوں سے شکست ہوئی، مخالف امیدوارکو جتوانے کے لیے جعلی فارم 45 بنائے گئے تھے۔ ریٹرننگ آفیسرنے حقائق کے برعکس دوبارہ گنتی کی درخواست مسترد کردی۔

عابد شیرعلی نے عدالت سے استدعا کرتے ہوئے کہا تھا کہ عدالت حلقے میں دوبارہ گنتی کا حکم دے اوراس حلقے سے جیتنے والے پی ٹی آئی کے امیدوارفرخ حبیب کی کامیابی کا نوٹی فکیشن روک دے۔