انتخابات میں مبینہ دھاندلی کے خلاف اپوزیشن جماعتوں کا احتجاج آج ہوگا

اسلام آباد: 2018 کے عام انتخابات میں دھاندلی کیخلاف اسلام آباد میں الیکشن کمیشن کے دفتر کے سامنے اپوزیشن جماعتیں احتجاج کریں گی۔

انتخابات میں مبینہ دھاندلی کے خلاف (ن) لیگ تمام اپوزیشن جماعتوں کے ساتھ مل کر الیکشن کمیشن اسلام آباد کے باہر دوپہر ایک بجے بھرپور احتجاجی مظاہرہ کرے گی، پارٹی قیادت نے اپنے تمام ٹکٹ ہولڈرز کو احتجاج میں شرکت یقینی بنانے کے لیے ہدایت کردی ہے۔ احتجاجی مظاہرے میں پیپلز پارٹی اور ایم ایم اے سمیت 7 پارٹیاں شرکت کریں گی۔

دوسری جانب جمیعت علمائے اسلام خیبرپختونخوا کے کئی اضلاع میں دھرنا دے گی اور پشاور میں موٹر وے ٹول پلازہ پر بھی احتجاجی دھرنا دیا جائیگا، احتجاج میں شرکت کے لیے اے این پی نے بھی کارکنوں کو اسلام اباد الیکشن کمیشن آف پاکستان کے سامنے پہنچنے کی ہدایت کی ہے۔ احتجاج میں شامل ہونے کے لیے جماعت اسلامی اور پی پی کو بھی شامل ہونے کی دعوت دی گئی ہے۔

اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے احتجاجی کال کے پیش نظر وفاقی دارالحکومت میں سیکورٹی پلان ترتیب دے دیا گیا ہے، اراکین پارلیمنٹ کے علاوہ کسی کو بھی الیکشن کمیشن کے سامنےجانے کی اجازت نہ دینے کا فیصلہ کیاگیاہے۔ ریڈزون کے داخلی راستوں کو کنٹینر رکھ کر سیل کرنے پر بھی غورجاری ہے۔