نوازشریف کو لانے والا طیارہ لاہور ایئرپورٹ لینڈ کرگیا

اسلام آباد: سابق وزیراعظم نواز شریف کو لانے والا طیارہ لاہور ایئرپورٹ پر لینڈ کرگیا۔

احتساب عدالت سے ایون فیلڈ ریفرنس میں سزا پانے والے مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز آج نجی ایئرلائن کی پرواز ای وائے 423 کے ذریعے وطن واپس پہنچ رہے ہیں۔

فلائٹ شیڈول کے مطابق نواز شریف اور مریم نواز لندن سے براستہ ابوظہبی لاہور کے لیے روانہ ہوئے تھے، ابوظہبی میں مختصر قیام کے بعد نجی پرواز کو لاہور کے لیے روانہ ہونا تھا مگر وہاں ان کا قیام طویل ہوگیا جس پر مریم نواز کا کہنا تھا کہ پرواز میں پراسرار تاخیر کی گئی۔آخرکار تقریباً 6 بجے نوازشریف کی پرواز نے ابوظہبی سے لاہور کے لیے اڑان بھری۔

پرواز کے دوران مریم نواز نے اپنے والد نوازشریف کا ویڈیو پیغام سوشل میڈیا پر شیئر کیا جس میں نواز شریف نے کہا پاکستان ایک فیصلہ کن موڑ پر کھڑا ہےمیں یہ قربانی آپ کی نسلوں اور پاکستان کے مستقبل کے لیے دے رہاہوں۔

استقبال کی تیاریاں
مسلم لیگ (ن) کے کارکن چلو چلو ایئر پورٹ کے نعرے پر لبیک کہتے ہوئے لاہوری دروازے پر جمع ہونا شروع ہوچکے ہیں۔ صبح سے ہی لاہور کے افق پر گھنے کالے سیاہ بادلوں نے ڈیرے ڈال رکھے ہیں، وقفے وقفے سے تیز اور ہلکی بارش کی آنکھ مچولی جاری ہے۔ لیکن ایئر پورٹ چلو کے نعرے نے مسلم لیگ (ن) کے کارکنوں کے خون گرما دئیے ہیں اور کارکن دھوپ اور بارش کی پرواہ کیے بغیر اپنے قائد کے استقبال کے لئے پرجوش نظر آرہے ہیں۔

شہباز شریف کی کارکنوں سے ایئرپورٹ چلنے کی اپیل
صدر مسلم لیگ(ن)شہباز شریف نے ویڈیو پیغام جاری کرتے ہوئے لیگی کارکنان سے اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ آج ایک تاریخی دن ہے، آج ریاستی جبر اور تشدد کی ناکامی کا دن ہے، آج ہمیں اپنے قائد میاں محمد نوازشریف جواپنی شدید بیمار اہلیہ کو لندن میں خدا حافظ کہنے کے بعد چند گھنٹوں میں لاہورایئرپورٹ پہنچنے والے ہیں۔ آپ تمام لوگ جوق در جوق لاہور ایئرپورٹ پہنچ کر ان کا والہانہ استقبال کریں۔

صدر مسلم لیگ (ن)نے کہامیں اس وقت اندرون شہر میں ہوں اور میرے علم میں ہے کہ ارد گرد بے شمار لوگ اکھٹے ہورہے ہیں جو ایئرپورٹ جانے کے لیے بے تاب ہیں۔ جمعہ کی نماز اداکرنے کے بعد آپ اللہ کا نام لیں اور میرے ساتھ ایئرپورٹ چلیں اوراس ملک کے اندرترقی، خوشحالی اورجمہوریت کو فروغ دینے کے لیے اپنا کرداراداکریں۔