بھارت میں مودی سرکار نے عازمین حج کی سبسڈی ختم کردی

نئی دلی: بھارتی حکومت نے رواں سال سے عازمین حج کو اخراجات کی مد میں فراہم کردہ سبسڈی ختم کرنے کا اعلان کردیا۔

بھارت کے وزیر مملکت برائے اقلیتی امور مختار عباس نقوی کے مطابق حکومت امسال عازمین حج کو سبسڈی نہیں دے رہی اور اس اقدام کا مقصد حکومت کی اقلیتوں کو خومختار بنانے کی پالیسی ہے اور اس ایجنڈے کے تحت حکومت اقلیتوں کی خوشامد کرنے کے بجائے انہیں اپنے طور پر طمانیت فراہم کرنا ہے۔

مختار عباس نے کہا کہ حج سبسڈی کو ختم کرنا سپریم کورٹ کے 2012 میں جاری ہونے والے حکم نامے پر عمل پیرا کرنا بھی ہے جس میں 2022 تک سبسڈی بتدریج کم کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ امداد کی مد ہونے والی کٹوتی کی رقم کو اقلیتوں کے فلاح و بہبود، خصوصاً لڑکیوں کی تعلیم پر خرچ کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ بھارت میں کئی دہائیوں سے ہر حکومت عازمین حج کو سبسڈی فراہم کرتی آئی ہے۔