چکوال کے ضمنی انتخاب میں ن لیگی امیدوار کی برتری

چکوال: پنجاب اسمبلی کے حلقہ پی پی 20 کے ضمنی انتخاب میں غیر سرکاری نتائج کے مطابق ن لیگ سرفہرست جب کہ تحریک انصاف دوسرے نمبر پر ہے۔

پنجاب اسمبلی کے حلقہ پی پی 20 چکوال کے ضمنی انتخاب میں پولنگ اسٹیشنز کے نتائج آنا شروع ہوگئے ہیں، 58 پولنگ اسٹیشنز کے غیر سرکاری و غیر حتمی نتائج کے مطابق مسلم لیگ (ن) کے چوہدری حیدر سلطان 21 ہزار 982 ووٹ لے کر پہلے، تحریک انصاف کے طارق افضل 9799 ووٹ کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہیں۔

چکوال کے ضمنی انتخاب میں کل 227 پولنگ اسٹیشنز ہیں تاہم 60 کے قریب نتائج سامنے آتے ہی چکوال میں مسلم لیگ (ن) کے کارکنوں نے آتش بازی شروع کردی۔

قبل ازیں چکوال کے حلقہ پی پی 20 میں ضمنی الیکشن کے لیے پولنگ صبح وقت پر ہی شروع ہوگئی تھی جو شام 5 بجے تک بغیر کسی وقفے کے جاری رہی جب کہ پولیس، رینجرز اور پاک فوج کے جوانوں نے سیکیورٹی کے فرائض سرانجام دیے۔

دو لاکھ 79 ہزار 530 ووٹرز کے لیے 227 پولنگ اسٹیشنز بنائے گئے جب کہ ایک لاکھ 44 ہزار مرد اور 1 لاکھ 35 ہزار خواتین ووٹرز نے حق رائے دہی استعمال کیا۔

الیکشن کمیشن نے 45 پولنگ اسٹیشنز کو انتہائی حساس اور 82 کو حساس قرار دیا تھا جب کہ 1800 سے زائد انتخابی عملہ تعینات کیا گیا، 45 انتہائی حساس پولنگ اسٹیشنر پر سی سی ٹی وی کیمرے لگائے گئےاور آزمائشی بنیاد پر ووٹرز کی بائیومیٹرک تصدیق بھی کی گئی۔

دریں اثنا پی پی 20 چکوال ضمنی انتخاب میں ڈی آر او نے 4 جنوری کو حمزہ شہباز، میجر طاہر اقبال اور دیگر کی طرف سے ن لیگی امیدوار کی سلطان حیدر کی مہم چلانے پر ضابطہ اخلاق کی خلاف وزری کا نوٹس جاری کیا اور ان پر 50 ہزار جرمانہ عائد کردیا۔

واضح رہے کہ مسلم لیگ (ن) کے رکن اسمبلی چوہدری لیاقت علی خان کی وفات کے باعث نشست خالی ہوئی تھی، 2013 میں (ن) لیگ نے یہ نشست 26 ہزار ووٹوں کی برتری سے جیتی تھی۔