مسلم لیگ (ن) کا شاہد خاقان عباسی کو عارضی وزیراعظم بنانے کا اعلان

اسلام آباد: مسلم لیگ (ن) نے شہباز شریف کے رکن قومی اسمبلی منتخب ہونے تک شاہد خاقان عباسی کو عارضی طور پر وزیر اعظم بنانے کا باضابطہ اعلان کردیا ہے۔

نواز شریف کی زیر صدارت پاکستان مسلم لیگ (ن) کا مشاورتی اجلاس ہوا، جس میں شہباز شریف کے رکن قومی اسمبلی منتخب ہونے تک عبوری مدت کے وزیراعظم کے لیے شاہد خاقان عباسی اور خواجہ آصف کا نام زیرغور آیا۔ بعد ازاں شاہد خاقان عباسی کو عارضی طور پر وزیراعظم بنانے کا باضابطہ اعلان کردیا گیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ اجلاس کے دوران شرکاء نے نواز شریف کی قیادت پر مکمل یکجہتی اور اعتماد کااظہار کیا، ان کا کہنا تھا کہ ہم نظریاتی کارکن ہیں اور نواز شریف کے اشارے پر اسمبلی رکنیت سے مستعفی ہونے کے لئے تیار ہیں لیکن ان کا ساتھ نہیں چھوڑیں گے، ہمیں کسی عہدے کا لالچ نہیں، ہم پاکستان کے لئے کام کرنا چاہتے ہیں، ملک کی تعمیر و ترقی سے متعلق ان کا ایجنڈا جاری رکھیں گے۔

نواز شریف گزشتہ روز ہی شہباز شریف کو ملک کا اگلا وزیر اعظم بنانے کا عندیہ دے چکے تھے جب کہ شہبازشریف کو نوازشریف کی نااہلی سے خالی ہونے والی نشست این اے 120 سے الیکشن لڑوا کرمنتخب کرایا جائے گا اور وزیراعلی پنجاب کے عہدے کی سپردگی کے حوالے سے بھی اجلاس میں غور کیا گیا۔

عدالت سے سزا یافتہ کوئی شخص پارٹی عہدہ نہیں رکھ سکتا اس لیے نواز شریف وزارت عظمیٰ کے ساتھ پارٹی کی صدارت سے بھی فارغ ہوگئے ہیں، مسلم لیگ (ن) کی صدارت کے لئے جلد پارٹی کی جنرل کونسل کا اجلاس طلب کیا جائے گا۔ پارٹی کے جنرل کونسل اجلاس میں شہباز شریف کو نیا صدر نامزد کردیا جائے گا۔ شہبازشریف کی بطور پارٹی صدر تقرری کے بعد الیکشن کمیشن کو آگاہ کردیا جائے گا۔