وزیراعظم نوازشریف 6 روزہ دورے پرچین پہنچ گئے

اسلام آباد: وزیر اعظم نواز شریف 66 رکنی وفد کے ہمراہ 6 روزہ سرکاری دورے پر چین پہنچ گئے۔

وزیراعظم نواز شریف چینی صدر کی دعوت پر بیجنگ میں عالمی کانفرنس میں شرکت کے لیے 66 رکنی وفد کے ہمراہ 6 روزہ سرکاری دورے پر چین پہنچ گئے۔ چاروں صوبوں کے وزرائے اعلیٰ سمیت وفاقی وزرا اسحاق ڈار، خرم دستگیر، احسن اقبال، سعد رفیق، سرتاج عزیز اور انوشہ رحمان بھی وزیراعظم کے ہمراہ ہیں۔

وزیراعظم بیجنگ میں عالمی کانفرنس میں شرکت کے علاوہ سی پیک سے متعلق کئی منصوبوں اور مفاہمتی یاداشتوں پر دستخط کریں گے، 14 اور 15 مئی کو بیجنگ میں ہونے والے بیلٹ اینڈ روڈ فورم میں 27 ممالک کے سربراہان شریک ہوں گے۔ وزیراعظم نواز شریف فورم کی اختتامی نشست سے خطاب کرنے والے 3 رہنماؤں میں شامل ہیں جب کہ فورم کی سائیڈ لائن میں وزیراعظم چین کے صدر اور وزیراعظم سمیت دیگر ممالک کے سربراہان سے بھی ملاقاتیں کریں گے۔

وزیراعظم پاکستانی وقت کے مطابق 2 بج کر25 منٹ پر بیجنگ پہنچیں گے اور کل صبح سوا 7 بجے چینی وزیراعظم سے ملاقات کریں گے، ملاقات کے بعد کئی مفاہمتی یادداشتوں پر دستخط کئے جائیں گے۔ وزیراعظم کل سوا 8 بجے چینی صدر شی جن پنگ سے ملاقات کریں گے جہاں بعد ازاں پاکستانی وفد کو ظہرانہ بھی دیا جائے گا۔

وزیراعظم کل دوپہر 12 بجے چین کے شعبہ توانائی کے وفود سے ملیں گے اور سہ پہر 3 بجے منگولیا کے وزیراعظم سے بھی ملاقات کریں گے۔ وزیراعظم اتوار کو ساڑھے 9 بجے ایتھوپیا کے وزیراعظم اور دوپہر 12 بجے بیلاروس کے صدرسے بھی ملاقات کریں گے، اتوار ہی کو دوپہر ایک بجے وزیراعظم ویتنام کے صدر سے بھی ملیں گے اور پھر دوپہر 3 بجے چین کی جانب سے ریاستی عشائیے کے لئے روانہ ہو جائیں گے۔

وزیراعظم نواز شریف اتوار کو ساڑھے 4 بجے سینٹر فار پرفارمنگ آرٹ جائیں گے اور شام 5 بجے کلچرل شو میں شرکت کریں گے، وزیراعظم پیرکو ینکی جھیل پر عالمی کانفرنس میں شرکت کریں گے اور 5 منٹ کا خطاب بھی کریں گے، وزیراعظم پیرکی شام ہنگ زو پہنچیں گے جب کہ وزیراعظم کے وفد کے بیشتر ارکان پیر کی شام اسلام آباد واپس آ جائیں گے۔