نوازشریف اپنی ہٹ دھرمی کی وجہ سےاستعفیٰ نہیں دے رہے، افتخار چوہدری

کراچی: سابق چیف جسٹس پاکستان افتخار چوہدری کا کہنا ہے کہ نوازشریف پاناما کا مقدمہ ہار گئے اور عوام جیت گئی ہے لیکن اب ان کی ہٹ دھرمی ہے کہ وہ استعفیٰ نہیں دے رہے۔

کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے سابق چیف جسٹس اور جسٹس اینڈ ڈیموکریٹک پارٹی کے سربراہ افتخار محمد چوہدری نے کہا کہ پاناما لیکس کا مقدمہ حکومت کے خلاف نہیں بلکہ ایک شخص اور اس کے خاندان کے خلاف تھا جب کہ درخواست گزار سیاسی جماعت تھی لیکن مقدمہ عوام کا تھا، کیس کے لارجز بینچ کے پانچوں ججز میں سے کسی ایک نے بھی نوازشریف کے حق میں فیصلہ نہیں دیا، قطری خط کو پانچوں ججز نے تسلیم نہیں کیا اور نااہلی کا فیصلہ 3 دو کا تھا لیکن وزیراعظم کو کلین چٹ نہیں ملی۔

افتخار چوہدری نے کہا کہ نوازشریف پاناما کا مقدمہ ہار گئے اور عوام جیت گئی لیکن اب ان کی ہٹ دھرمی ہے کہ وہ استعفیٰ نہیں دے رہے، فرد واحد کی ہٹ دھرمی اور انتقامی سیاست ملک کے لیے زہر قاتل ہے اس کے نتائج قوم پہلے بھی بھگت چکی ہے اور آدھا ملک بھی ہٹ دھرمی کی وجہ سے گنوا چکے ہیں، نوازشریف سابق صدر پرویز مشرف سے سمجھوتا کرکے بیرون ملک چلے گئے اور ان کے جانے کے بعد عوام حالات کو بھگتتے رہے۔