جے شری رام نہ کہنے پرانتہاء پسند ہندوؤں کا مسلمانوں پرتشدد

حیدر آباد: انڈین میڈیا کے مطابق بھارتی شہر حیدر آباد میں انتہاء ہسند ہندوؤں نے مسلمان نوجوانوں کو جے شری رام نہ کہنے پر بدترین تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔ واقعے میں 5 نوجوانوں کے شدید زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں۔ زخمی نوجوانوں محمد فیضان، سید سہیل، سید بشیر، عامر اور فردوس شامل ہیں جنھیں شدید زخمی حالت میں گاندھی ہسپتال داخل کرا دیا گیا ہے۔

یہ شرمناک واقعہ حیدر آباد کے علاقے سوریہ نگر کالونی میں پیش آیا۔ انڈین میڈیا کے مطابق کچھ مسلم نوجوان موٹر سائیکل پر جا رہے کہ انتہاء پسند ہندوؤں نے انھیں زبردستی روک کر جے شری رام کہنے کے لئے کہا، لیکن جب انہوں نے ایسا کہنے سے انکار کر دیا تو انہوں نے ان مسلمان نوجوانوں پر حملہ کر دیا۔ اس واقعہ کے بعد سوریہ نگر علاقہ میں کشیدگی پیدا ہو گئی ہے۔ پولیس نے واقعے کا مقدمہ درج کرتے ہوئے صورتحال کے پیش نظر باھری نفری تعینات کر دی ہے۔