مزار قائد کو عوام کے لئے بند کردیا گیا

کراچی: ملک بھر میں جاری دہشت گردی کی لہر اور سیکیورٹی خدشات کے باعث مزارقائد کو عوام کے لئے بند کردیا گیا ہے۔

انتظامیہ نے بانی پاکستان قائداعظم کے مزار کو سیکیورٹی خدشات کے باعث عوام کے لئے بند کردیا ہے اور مزار کے داخلی اور خارجی راستوں پر پولیس اور رینجرز کے اہلکار تعینات کردیئے گئے ہیں۔

دوسری جانب سانحہ لعل شہبازقلندر کے بعد ملک بھر میں قانون نافذ کرنے والے ادارے حرکت میں آگئے ہیں اور ملک کے تمام حساس مقامات کی سیکیورٹی انتہائی سخت کردی ہے۔ شہرقائد میں واقع صوفیائے کرام کے مزارات کو بھی زائرین کے لئے بند کردیا گیا تھا تاہم وفاقی وزیرداخلہ کی برہمی پر مزارات کو بند کرنے کے بجائے سیکیورٹی بڑھا دی گئی ہے۔