سیہون کے دووزیراعلیٰ بھی قسمت نہ بدل سکے

کراچی : صوبہ سندھ کو دو وزیراعلیٰ سیہون سے ملے مگر شہر کی قسمت نہ سنور سکی۔

قلندرکی نگری آج بھی سڑکوں اور اسپتال سے محروم ہیں ملک بھر کے زائرین کا مرکز سہیون کا کوئی پرسان حال نہیں ہے ۔

سہون سے سندھ کو دو وزیراعلیٰ ملے مگر قلندر کی یہ نگری تباہی سے دوچار ہے سڑکیں ہیں نہ اسپتال ہے سیہون کا پرسان حال کوئی نہیں ہے ۔

یہ سہون نہیں ہے بلکہ ایک کھنڈر ہے جہاں کا ایک ایک مکین بنیادی انسانی حقوق سے یکسر محروم ہے، اسپتال کی جنگلا نما عمارت میں ڈاکٹروں کی قلت سیہون کے مکین جائیں تو کہاں جائیں۔

اہلیان سیہون نے پہلے عبداللہ شاہ اور پھر مراد علی شاہ کو ووٹ دے کر اسمبلیوں میں بھیجا مگر ان کی قسمت نہ سنور سکی۔