دہشت گردی کے خلاف جنگ، پاکستان کو 118 ارب ڈالر کا نقصان

کراچی: اسٹیٹ بینک آف پاکستان کا کہنا ہے کہ ملک میں جاری دہشت گردی کے خلاف جنگ کے باعث ملک کو اب تک 118 ارب ڈالر سے زائد کا نقصان اٹھانا پڑا ہے اور یہ رقم مجموعی سالانہ ملکی پیداوار کے تیسرے حصہ سے زائد ہے۔

فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی کے مطابق اسٹیٹ بینک آف پاکستان نے معاشی کارکردگی کی سالانہ رپورٹ جاری کی، جس میں کہا گیا کہ 2002 سے 2016 تک دہشت گردی کے خلاف جنگ میں بل واسطہ اور بلا واسطہ ملک کو 118 ارب 30 کروڑ ڈالر کا نقصان ہوا۔

پاکستان کے سینٹرل بینک نے اپنی رپورٹ میں کہا کہ ‘دہشت گردی کے واقعات کے باعث ملک میں معاشی اور سماجی شعبے کی ترقی کو بہت زیادہ نقصان پہنچایا’۔

خیال رہے کہ 11 ستمبر 2001 میں امریکا پر ہونے والے حملوں کے بعد انھوں نے افغانستان میں فوجیں اتاریں تھی اور اس کے بعد پاکستان انتہا پسندی کے خلاف جنگ میں امریکا کا اہم اتحادی قرار دیا گیا۔