گذشتہ ہفتے پاکستان اسٹاک مارکیٹ ملکی تاریخ کی بدترین مندی کی لپیٹ میں رہی

کراچی:گذشتہ ہفتے پاکستان اسٹاک مارکیٹ ملکی تاریخ کی بدترین مندی کی لپیٹ میں رہی ،پورے ہفتے برقرار رہنے والی مندی کے سبب انڈیکس 1400سے زائد پوائنٹس گھٹ گیا اور مجموعی انڈیکس 41ہزار اور40ہزار پوائنٹس کی دو نفسیاتی حد سے نیچے گرتا ہوا 39800پوائنٹس کی کم ترین سطح پر بند ہوا، شدید مندی کی وجہ سے ایک ہفتے کے دوران مارکیٹ کے سرمائے میں3کھرب سے زائدروپے کی کمی ریکارڈکی گئی جس سے سرمائے کاحجم84کھرب سے گھٹ کر80کھرب روپے کی سطح پرآگیا۔سیاسی افق پر غیر یقینی صورتحال اور اسلام آباد میں دھرنے کے اعلان سے سرمایہ کار متزلزل دکھائی دیے انہوں نے نئی سرمایہ کاری سے ہاتھ روکنے کے ساتھ مارکیٹ میں لگے سرمائے کو بھی نکال لیا سرمائے کے انخلاء پر مارکیٹ بحرانی کیفیت سے دوچار ہو نے سے تنزلی کا شکار ہو گئی ۔ اسٹاک ماہرین کے مطابق مارکیٹ میں سرمایہ کاری کے لئے کوئی نیاٹریگر موجود نہیں جس میں سرمایہ کاری دلچسپی ظاہر کر سکیں اس لئے پکستان اسٹاک مارکیٹ گذشتہ کاروباری ہفتے کے آغاز سے ہی مندی کی زد میں رہی اور مندی کا یہ سلسلہ پانچوں دن برقرا ر دیکھا گیا ۔