سندھ طاس معاہدہ توڑا گیا تو جنگ تصور ہوگی:سرتاج عزیز

اسلام آباد: قومی اسمبلی مودی سرکار کی دھمکیوں کیخلاف یک زبان ہو گئی۔ سندھ طاس معاہدے کیخلاف بھارتی سازشوں اور کشمیریوں پر مظالم کیخلاف قرارداد متفقہ طور پر منظور کرلی گئی۔ اپوزیشن جماعتوں کی مشترکہ قرارداد میں سندھ طاس معاہدے کیخلاف مودی سرکار کی سازشوں اور جنرل اسمبلی میں کشمیر پر پرانا راگ الاپنے کی شدید مذمت کی گئی۔ قرارداد میں کشمیریوں کی حمایت جاری رکھنے کا اعلان کیا گیا۔ مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے پالیسی بیان دیتے ہوئے بھارت کو متنبہ کیا کہ سندھ طاس معاہدے توڑنے کی کوشش جنگ تصور ہو گی۔ سرتاج عزیز نے دو ٹوک الفاظ میں کہا کہ پاکستان بھارتی دباؤ میں آنے والا نہیں ہے۔ کلبھوشن یادیو کا معاملہ مکمل دستاویزی ثبوت کے ساتھ جلد اٹھایا جائیگا۔