ماڈل قندیل بلوچ اپنے ہی بھائی کے ہاتھوں قتل

ملتان: سوشل میڈیا میں اپنی بے باک وڈیوز اور متنازع بیانات کے حوالے سے معروف قندیل بلوچ کو ان کے بھائی نے مبینہ طور پر قتل کردیا ہے۔

قندیل بلوچ کو ملتان کے مضافاتی علاقے مظفرگڑھ کے گرین ٹاؤن میں اپنے گھر میں گلہ گھونٹ کر قتل کیا گیا ہے۔ آر پی او ملتان کا کہنا ہے کہ قندیل بلوچ اپنے والد کی عیادت کے لیے ایک ہفتے سے گرین ٹاؤن میں اپنے ماں باپ کے گھر میں ہی موجود تھیں، قندیل بلوچ کے والدین نے اپنا بیان ریکارڈ کرادیا ہے جس کے مطابق قندیل کو ان کے بھائی وسیم نے قتل کیا ہے، ملزم فرار ہے جس کی گرفتاری کے لیے اقدامات کرلئے گئے ہیں۔

قندیل بلوچ کے والد نے پولیس کو دیئے گئے بیان میں کہا ہے کہ وہ اپنی بیوی اور بیٹے وسیم سمیت گھر کی چھت پر جب کہ قندیل بلوچ نیچے کمرے میں سوئی تھی ۔ صبح 10 بجے تک جب قندیل نہ جاگی تو انہوں نے قندیل کو جگانے کی کوشش کی لیکن پتہ چلا کہ وہ مرچکی ہے۔ واقعے کے بعد اس کا بھائی وسیم غائب ہے جو کہ رات 3 بجے نیچے اترا تھا۔ وسیم جاتے ہوئے قندیل کا موبائل فون اور اس کی پاس موجود پیسے بھی لے گیا ہے۔