سندھ کا 8 کھرب 69 ارب روپے سے زائد کا بجٹ پیش

کراچی: حکومت سندھ نے مالی سال 17-2016 کے لئے 8 کھرب 69 ارب روپے سے زائد کا بجٹ پیش کردیا۔

اسپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درانی کی سربراہی میں ہونے والے اجلاس میں صوبائی وزیر خزانہ مراد علی شاہ نے مالی سال 17-2016 کے لئے 869 ارب 11 کروڑ 77 لاکھ روپے کا بجٹ پیش کیا۔ صوبائی وزیر خزانہ کا کہنا تھا کہ سالانہ ترقیاتی بجٹ میں 39 فیصد اضافہ کیا گیا ہے، ترقیاتی بجٹ میں 50 ارب روپے اضافے کے بعد مجموعی طور 265 ارب 98 کروڑ روپے مختص کئے گئے ہیں جب کہ بجٹ خسارے کا تخمینہ 14 ارب 61 کروڑ 74 لاکھ روپے لگایا گیا ہے۔

مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ رواں مالی سال کے لئے ٹیکس وصولیوں کا ہدف 157 ارب روپے ہے جب کہ ٹیکس وصولیوں کا تخمینہ 166 ارب 3 کروڑ 29 لاکھ لگایا گیا ہے۔ خدمات پر سیلز ٹیکس 14 فیصد سے کم کر کے 13 فیصد کر دیا گیا ہے جب کہ کاسمیٹکس اور پلاسٹک سرجری کے شعبے میں 13 فیصد ٹیکس کی تجویز ہے۔ وزیر خزانہ نے بتایا کہ صحت اور تعلیم کے لئے بجٹ میں 15 فیصد اضافہ کیا گیا ہے جب کہ اسپتالوں کی اپ گریڈیشن کی مد میں 44 کروڑ روپے رکھے گئے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ بجٹ میں کراچی کے لئے 10 ارب روپے کا خصوصی پیکج رکھا گیا ہے جب کہ سڑکوں کی مرمت کے لئے 4 ارب روپے مختص کئے گئے ہیں۔