افغان صدر اشرف غنی نے ملا اختر منصور کی موت کی تصدیق کردی

کابل / واشنگٹن / اسلام آباد: پینٹاگون کے بعد افغان صدر اشرف غنی نے بھی ڈرون حملے میں طالبان سربراہ ملا اختر منصور کی موت کی تصدیق کر دی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق افغان صدر اشرف غنی کی جانب سے جاری ایک بیان میں ملا اختر منصور کے مرنے کی تصدیق کر دی گئی ہے جب کہ اہم طالبان کمانڈر نے بھی طالبان سربراہ کی موت کی تصدیق کردی ہے۔ دوسری جانب امریکی وزیر خارجہ جان کیری کا کہنا ہے کہ پاکستان اور افغان حکام کو اعتماد میں لے کر حملہ کیا گیا، ملا اختر منصور افغانستان میں امریکی فوجیوں کے لئے خطرہ بن چکا تھا، طالبان سربراہ پر حملے کے حوالے سے وزیراعظم نواز شریف سے ٹیلی فون پر بات کی تھی جب کہ حملہ واضح پیغام ہے کہ پرامن اور خوشحال افغانستان کے لئے کام جاری رکھیں گے۔

ملا اختر منصور کی موت کے حوالے سے پاکستانی دفتر خارجہ کے ترجمان کا کہنا ہے کہ طالبان سربراہ کی ہلاکت کا میڈیا رپورٹس کے ذریعے علم ہوا، طالبان سپریم کمانڈر کی موت کی تصدیق کا انتظار کر رہے ہیں۔ پاکستانی حکام کے مطابق فوجی طاقت کا استعمال افغان مسئلے کا حل نہیں اور طالبان کو بھی تشدد کا راستہ ترک کر کے مذاکرات کی میز پر آ جانا چاہیئے۔